سن 1947 سے آج تک پاکستان آرمی جنرل کی فہرست

پاکستان کی آزادی کے ابتدائی عرصے میں فوج کے سب بڑے عہدے کا نام کمانڈر انچیف تھا، جو کہ 1972 میں چیف آف آرمی سٹاف کر دیا گیا۔

سن 1947 سے 2020 تک آرمی چیف کی فہرست جنہوں نے پاکستانی فوج کے سب سے بڑے عہدے پر خدمات سرانجام دیں۔

جنرل فرینک میسروی: General Sir Frank Messervy

Lieutenant-General-Sir-Frank-Messervy
Wikimedia

 

 

 

 

 

فرینک میسروی  ایک برطانوی جنرل تھے۔ ان کا تعلق  9th Hodson’s Horseیونٹ سے تھا ، انہوں نے پاکستان کی آزادی کے فورا بعد پاک فوج کا چارج سنبھالا اور 10 فروری 1948 تک پاکستان کے پہلے کمانڈر انچیف کی حیثیت سے خدمات سرانجام دیں۔

جنرل ڈگلس گریسی: Douglas Gracey

douglas gracey
Wikimedia

 

 

 

 

 

ان کا تعلق 1st Gurkha Rifles  یونٹ سے تھا ، فرینک میسوری کے بعد ، ڈگلس گریس 11 فروری 1948 کو پاکستان کے دوسرے کمانڈر انچیف بنے۔ اور 16 جنوری 1951 کو اپنی مدت ملازمت سے ریٹائر ہوۓ ۔

جنرل ایوب خان

General-Aub-Khan
Wikimedia

 

 

 

 

 

ایوب خان نے پہلے پاکستانی کی حیثیت سے 23 جنوری 1951 کو پاک فوج میں کمانڈر انچیف کا عہدہ سنبھالا۔ ان کا تعلق 1/14 Punjab Regiment یونٹ سے تھا, وہ 27 اکتوبر 1958 کو ریٹائر ہوۓ ۔

جنرل محمد موسیٰ خان

general-muhammad-musa-khan
Wikimedia

 

 

 

 

 

موسیٰ خان طویل عرصے تک کمانڈر انچیف کے عہدے پر فائز رہنے والے آرمی جنرل ہیں ۔ان کا تعلق 6/13 Frontier Force Rifles یونٹ سے تھا۔ انہوں نے 27 اکتوبر 1958 سے 17 ستمبر 1966 تک تقریباً  8 سال پاک فوج کو کمانڈ کیا موسیٰ خان 1965 کی جنگ کے دوران بھی پاکستان کے کمانڈر انچیف تھے۔

جنرل یحییٰ خان

General-Yahya_Khan
Wikimedia

 

 

 

 

 

جنرل یحییٰ خان نے موسیٰ خان کے بعد 18جون 1966کوکمانڈر انچیف مقرر ہوۓ۔ ان کا تعلق Baluch Regiment 4/10 یونٹ سے تھا،اورانہوں نے پانچ سال تک اپنے فرائض سرانجام دیے ۔ وہ  20 دسمبر 1971 کو ریٹائر ہوۓ۔

جنرل گل حسن خان

General_Gul_Hassan_Khan
Wikimedia

 

 

 

 

 

لیفٹیننٹ جنرل گل حسن خان بنگلہ دیش کی تشکیل کے بعد پاکستان کے پہلے کمانڈر انچیف تھے۔ ان کا تعلق ARMOURED CROP  یونٹ سے تھا۔ ان کی مدت ملازمت کا عرصہ بہت مختصر تھا ، وہ  20 دسمبر 1971 سے 3 مارچ 1972 تک پاکستان کے آرمی چیف رہے۔گل حسن خان  پاکستان کے آخری کمانڈر انچیف تھے۔ اس کے بعد اس عہدے کا نام تبدیل کر دیا گیا تھا۔

جنرل ٹکا خان

General.Tikka-Khan
Wikimedia

 

 

 

 

 

جنرل ٹکا خان 3 مارچ 1972 میں پہلے  چیف آف آرمی سٹاف مقرر ہوۓ۔ ان کا تعلق ARTILLERYیونٹ سے تھا۔ انہوں نے چار سال تک اپنی اپنی ذمہ داریاں انجام دی ۔اور یکم مارچ 1976 کو اپنے منصب سے ریٹائرہوۓ۔

جنرل محمد ضیاء الحق

Muhammad_Zia-ul-Haq
Wikimedia

 

 

 

 

 

جنرل ضیاء الحق پاکستان کے مشہور آرمی چیف میں سے ایک تھے ، وہ یکم مارچ 1976 کو آرمی چیف بنے ۔ ان کا تعلق ARMOURED CROP یونٹ سے تھا۔ ضیاء الحق 17 اگست 1988 کو ایک طیارے کے حادثے میں شہید ہوۓ ۔

جنرل مرزا اسلم بیگ

Gen_Mirza_Aslam_Beg
Wikimedia

 

 

 

 

 

محمد ضیاء الحق کی شہادت کے بعد جنرل مرزا اسلم بیگ کو 17  اگست  1988 چیف آف آرمی اسٹاف مقرر کیا گیا ۔ ان کا تعلق Baluch Regiment یونٹ سے تھا۔  انہوں نے تین سال تک فوج کی قیادت کی اور 16 اگست 1991 کو ریٹائر ہوئے ۔

جنرل آصف نواز جنجوعہ

General-Asif-Nawaz-Janjua
Wikimedia

 

 

 

 

 

جنرل آصف نواز جنجوعہ کا تعلق Punjab Regiment  یونٹ سے تھا۔  وہ 16 اگست 1991 کو پاکستان کے آرمی چیف بنے اور  تقریباً ڈیڑھ سال کی مختصر ملازمت کےبعد 56سال کی عمر میں 8 جنوری 1993 کو دل کا دورہ پڑنے سے انتقال کر گئےتھے۔

جنرل عبدالوحید کاکڑ

General-abdul-waheed-kakar
Wikimedia

 

 

 

 

 

آصف نواز جنجوعہ کی اچانک وفات کے بعد جنرل عبدالوحید کاکڑ نے 11 جنوری1993 کو چیف آف آرمی اسٹاف کی ذمےداری سنبھالی ۔ ان کا تعلق Frontier Force Regiment یونٹ سے تھا۔  وہ تین سال بعد 12 جنوری 1996 کو ریٹائر ہوۓ۔

جنرل جہانگیر کرامت

pak-army-museum
Pakistan Army Museum

 

 

 

 

 

جہانگیر کرامت کا تعلق ARMOURED CROP یونٹ سے تھا۔ انہوں نے 12 جنوری 1996 کو چیف آف آرمی اسٹاف کی ذمےداری سنبھالی، اور ان کی مدت ملازمت 6 اکتوبر 1998 کو ختم ہوئی۔

جنرل جنرل پرویز مشرف

General-Musharraf-musharraf
Wikimedia

 

 

 

 

 

جنرل پرویز مشرف نے 6 اکتوبر 1998 میں پاکستان آرمی کا چارج سنبھالا۔ ان کا تعلق ARTILLERYیونٹ سے تھا۔ وہ 28 نومبر 2007 کو اپنے منصب سے ریٹائر ہوۓ۔

جنرل اشفاق پرویز کیانی

General-ashfaq-kayani
Wikimedia

 

 

 

 

 

جنرل پرویز مشرف کے بعد جنرل اشفاق پرویز کیانی نے 29 نومبر 2007  کو پاکستان آرمی کا چارج سنبھالا ۔ ان کا تعلق Baluch Regiment یونٹ سے تھا۔ وہ تین سال کی مزید توسیع کے بعد 29 نومبر 2013  کو ریٹائر ہوۓ۔

جنرل راحیل شریف

General-Rahil-Sharif
Wikimedia

 

 

 

 

 

جنرل راحیل شریف نشان حیدر حاصل کرنے والے میجر شبیر شریف کے بھائی ہیں۔ ان کا تعلق Frontier Force Regiment یونٹ سے تھا۔ راحیل شریف نے29 نومبر 2013 کو چیف آف آرمی اسٹاف کی ذمےداری سنبھالی۔   انہوں نے تین سال تک آرمی چیف کی حیثیت سے اپنے فرائض انجام دیے۔ اور 29 نومبر 2016 میں ریٹائر ہوۓ۔

جنرل قمر جاوید باجوہ

General_Qamar_Javed_Bajwa
Wikimedia

 

 

 

 

 

ان کا تعلق 16th Baluch Regiment  یونٹ سے ہے۔ موجودہ حاضر سروس چیف آف آرمی اسٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے 29 نومبر 2016میں عہدہ سنبھالا اور تاحال اس عہدے پر موجود ہیں۔

مزید دیکھیں

ملتے جلتے مضامین

اوپر جائیں
Close
error: Alert: Content is protected !!